نشئی جادوگر ہوتے ہیں!

6

خود بلانوش بھی ایڈکشن کے ہاتھوں کٹھ پتلی بنے رہتے ہیں۔ وہ اس بات کی سُن گُن رکھتے ہیں کہ ان کی زندگی میں مسائل ہیں اور ان کا تعلق شراب اور منشیات سے ہے، تاہم وہ اس نظرئیے کو دل کی گہرائیو ں سے قبول نہیں کر پاتے۔ کھل کر ماننے کا تو سوال ہی نہیں اٹھتا۔ ایک لمبے عر صے تک خوشی وغمی، ہر موقعہ پر نشے کا استعمال کرتے کرتے انہیں یقین ہو جاتا ہے کہ نشہ ان کیلئے امرت دھا را ہے۔وہ کچھ نہ کچھ اور تلا ش کرتے ہیں جس پر ان مشکلا ت کا الزام دھرا جا سکے۔ بیوی، بچے، کام کاج، باس، یہ کچھ بھی ہو سکتا ہے لیکن منشیات پر الزام آئے یہ نہیں ہو سکتا، کیونکہ ان کا امرت دھارا خود فساد کی جڑ کیسے ہو سکتا ہے؟ ہرگز نہیں۔ یہ ہے خود فریبی کا مضبوط جال، توجہ اور بھٹک جانے کا گورکھ دھندا۔

منشیات، شراب اور دیگر علتیں گھروں کا امن و سکون تباہ کر دیتی ہیں۔ علتوں میں مبتلا انسان اصلاح کی طرف پہلا قدم خود نہیں بڑھاتے، یہ بیڑہ ان سے پیار کرنے والے اٹھاتے ہیں۔ علاج کا فیصلہ مریض کے ارد گرد صحت مند دماغوں سے ابھرتا ہے۔

منشیات کا استعمال بیمار اور لاچار کر دیتا ہے۔ یہ بیماری تباہ کن ہے۔ تاہم تسلی رکھیں یہ قابل علاج ہے۔ منشیات، شراب اور دیگر علتوں سے نجات کے کئی راستے ہیں۔

ایڈکشن سے نجات کیلئے مریض کا علاج میں آنا ضروری نہیں، اہل خانہ ٹریننگ کے ذریعے اپنے پیارے کو علت سے نجات دلا سکتے ہیں ایڈکشن قدم جما چکی ہو اور بیماری بہت پرانی ہو تو داخلہ ضروری ہو تا ہے، مریض میں علاج کی خواہش اور جذبہ کیسے پیدا کریں، آپ کو یہ سمجھانا ہماری ذمہ داری ہے ۔

وہ فیصلہ کیجئے جو مریض نہیں کر سکتا، اسے گھر سے لانے اور نشے سے نجات دلانے کی ذمہ داری ہم قبول کرتے ہیں۔ صداقت کلینک ایڈکشن کی بے مثال علاج گاہ ہے۔ آخر نشہ آپ کے پیارے کا مقدر کیوں رہے؟ ابھی رابطہ کیجئے۔

اپنی رائے یہاں لکھیئے:-

comments