نشے میں کہیں وہ تنہا نہ رہ جائے!

4

لاتعلقی کا مطلب کچھ نہ کرنا ہرگز نہیں! بلکہ یہ تو روحانی خوبی ہے جس میں ذہنی طور پر پُرسکون رہتے ہوئے ایسے اقدامات کئے جاتے ہیں جو آ پ کے پیارے کو نشے سے نجات دلانے میں مدد دیتے ہیں۔ لا تعلقی سے مراد جذباتی کنڑول ہے جو قدامات کی راہ ہموار کرتا ہے۔ جذباتی لاتعلقی تو ایک صحت مندانہ طرز عمل ہے جس میں آ پ نشے کا مزہ اور نشے کی تکلیفیں خود اسے ہی اٹھانے دیتے ہیں آپ اس کے فرائض منصبی سنبھال کر یہ تاثر پیدا نہیں کرتے کہ اس کی زندگی میں سب اچھا ہے۔ لاتعلقی میں آپ فارغ نہیں ہوتے بلکہ سو چ بچار کرتے ہیں، معلومات حا صل کرتے ہیں اور ایسے لوگوں سے تبادلہ خیالات کرتے ہیں جن کا مر یض پر اثرورسوخ ہوتا ہے۔ لاتعلقی میں آپ بہت دور نہیں جاتے اور نہ ہی بے دل اور تھکے ہارے نظر آتے ہیں۔ آپ دنیا داری میں بھر پور حصہ لیتے نظر آتے ہیں۔ یہ کوئی ’’استعفٰی‘‘ دینے والا رویہ نہیں ہوتا بلکہ زیادہ ہمت اور تن دہی سے سرگرم رہتے ہیں۔ آ پ پہچان لیتے ہیں کہ سب کچھ ہماری زندگی میں اللہ تعالیٰ کی طرف سے ہی آتا ہے اور وہ ہماری سکت سے زیادہ بوجھ نہیں ڈالتا۔

لاتعلقی ایک طرح سے آمادگی اور سپردگی کا طرز عمل ہے۔ آپ جانتے ہیں نتائج کی کوئی گارنٹی نہیں ہے لیکن پھر بھی سرگرم عمل رہتے ہیں۔ اسے کہتے ہیں ذمہ داری اٹھانا جو زندگی گزارنے کا اہم حصہ ہے۔

منشیات، شراب اور دیگر علتیں گھروں کا امن و سکون تباہ کر دیتی ہیں۔ علتوں میں مبتلا انسان اصلاح کی طرف پہلا قدم خود نہیں بڑھاتے، یہ بیڑہ ان سے پیار کرنے والے اٹھاتے ہیں۔ علاج کا فیصلہ مریض کے ارد گرد صحت مند دماغوں سے ابھرتا ہے۔

منشیات کا استعمال بیمار اور لاچار کر دیتا ہے۔ یہ بیماری تباہ کن ہے۔ تاہم تسلی رکھیں یہ قابل علاج ہے۔ منشیات، شراب اور دیگر علتوں سے نجات کے کئی راستے ہیں۔

سب کو داخلے کی ضرورت نہیں ہوتی ایڈکشن کی ابتداء ہو تو مریض کا علاج میں آنا ضروری نہیں، اہل خانہ ٹریننگ کے ذریعے اپنے پیارے کو علت سے نجات دلا سکتے ہیں ایڈکشن قدم جما چکی ہو تو مریض کو آؤٹ ڈور میں آنا پڑتا ہے۔ بیماری بہت پرانی ہو تو داخلہ ضروری ہو تا ہے ، مریض میں علاج کی خواہش اور جذبہ کیسے پیدا کریں، آپ کو یہ سمجھانا ہماری ذمہ داری ہے۔ وہ فیصلہ آپ کیجیے جو مریض نہیں کر سکتا، اسے گھر سے لانے اور نشے سے نجات دلانے کی ذمہ داری ہم قبول کرتے ہیں۔ صداقت کلینک ایڈکشن کی بے مثال علاج گاہ ہے۔ آخر نشہ آپ کے پیارے کا مقدر کیوں رہے ابھی رابطہ کیجیے۔

اپنی رائے یہاں لکھیئے:-

comments