چھوڑیں تو چھوڑیں کیسے؟

2

جو سگریٹ نوش افراد نادانی میں اسے معشوقہ بنا بیٹھے ہیں دراصل وہ بہت بڑی غلطی کرتے ہیں، اُن کے بقول ہم پرسکون رہنے کی خاطر اس کا استعمال کرتے ہیں حالانکہ حقیقت اس کے برعکس ہے آپ یہ جان کر حیران ہوں گے کہ اس میں پرسکون رکھنے والی کو ئی شے سرے سے موجود ہی نہیں، لیکن وہ نفسیاتی طور پر اس کی طرف متوجہ ہو جاتے ہیں اور یہ حالت اُن کی اصل بات سے توجہ ہٹائے رکھتی ہے یوں یہ سوچ رفتہ رفتہ ایک عادت کا روپ دھار لیتی ہے اور پھر یہ لوگ عادتاً اس کا استعمال شروع کر دیتے ہیں۔

تمباکو نوش افراد اپنے ذہنی دباؤ کو مینج کرنے کے جدید طریقوں سے ناآشنا ہوتے ہیں، ویسے وہ نادانی میں کہتے رہتے ہیں ہیں کہ ہم جدید طرز زندگی اپنائے ہوئے ہیں جبکہ اپنے ذہنی دباؤ سے نجات اور سکون کیلئے دس ہزار سال پرانی شے شراب اور ہزاروں سال پرانے طریقہ کار یعنی سگریٹ نوشی کا سہارا لیتے ہیں۔ لہذا انہیں اپنے ذہنی دباؤ کو کم کرنے اور پرسکون رہنے کیلئے جدید طریقے سیکھنے چاہئیں۔ اس کے ساتھ ساتھ وہ ورزش کا بھی استعمال کریں۔

اس آرٹیکل ’’چھوڑیں تو چھوڑیں کیسے؟‘‘ کا مقصد دراصل اُن لوگوں کی راہنمائی کرنا مقصود ہے جو نادانی میں تمباکو نوشی کو معشوقہ بنا بیٹھے ہیں اور کچھ جو اس کی عیاریوں، مکاریوں سے تو واقف ہو چکے ہیں مگر نجات پانے کا حوصلہ اور نسخہ نہیں ڈھونڈ پا رہے۔ اگر کوئی سگریٹ نوشی کو چھوڑنا چاہے تو اس کیلئے سادہ سا لفظ ہے ’’منصوبہ بندی‘‘ اور اگر یہ کر لی جائے تو منزل اور راستہ دونوں آسان ہو جاتے ہیں۔ اسے مضبوط قوت ارادی کی بدولت چھوڑا جا سکتا ہے اور وہ بہت جلد اس پر قابو پا لیتے ہیں مگر ہر شخص ایک مثالی قوت ارادی کا حامل نہیں ہوتا۔ اسی طرح کچھ لوگ دھیرے دھیرے اپنی اس عادت بد پر قابو پانے میں کامیاب ہو جاتے ہیں۔

لہذا ضرورت اس امر کی ہے کہ پہلے آپ ایک فہرست ترتیب دیں جس میں وہ وجوہات تحریر کریں کہ میں کیوں سگریٹ نوشی ترک کرنا چاہتا ہوں، جیسے میرے سگریٹ پینے سے میری فیملی کو ناگواری ہوتی ہے، مستقبل قریب میں میرے بچے بھی اس عادت کا شکار ہو سکتے ہیں، دوسروں کی موجودگی میں خود کو مجبوری سے روکنا پڑتا ہے یا پھر دوسروں کے سامنے شرمندگی کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔ میں ہر سال بے تحاشہ رقم اپنی صحت اور خوراک کی بجائے نشہ کی خاطر ہوا میں دھواں بنا کر صحت کی بربادی کیلئے پھونک دیتا ہوں۔ آپ ہفتہ میں ایک بار ضرور ایسا اظہار اپنے آپ سے کریں کہ میں اس بار اسے ترک کر دوں گا بجائے کہ صرف اپنی سالگرہ کے دن ہی ایسا عہد کریں اس طرح آپ سال میں 52 دفعہ سگریٹ نوشی ترک کرنے کے بارے میں خود کو قائل کریں گے اور عین ممکن ہے کہ آپ چند ہی ہفتوں میں نجات کی عملی کوشش کر رہے ہوں۔

  • 1
  • 2
  • اگلا صفحہ:
  • 3

اپنی رائے یہاں لکھیئے:-

comments